ایشین میراتھن چیمپیئن شپس ایک پراعتماد شہر کو ثابت کررہی ہے: ڈونگ گوان

ڈونگ گوان، چین، 22 نومبر 2017ء/سن ہوا-ایشیانیٹ/–

“خوبصورت ڈونگ گوان، سنسنی خیز میراتھن” کے عنوان سے 16 ویں ایشین میراتھن چیمپیئن شپس اور ڈونگ گوان انٹرنیشنل میراتھن 2017ء 26 نومبر کو ڈونگ گوان، چین میں شروع ہوگی۔ آنے والا یہ موقع لگ بھگ 30,000 دوڑنے والوں کی توجہ مبذول کراتا ہے، جن میں22 ایشیائی ممالک اور خطوں جیسا کہ جاپان، جنوبی کوریا، شمالی کوریا اور بھارت کے 49 پروفیشنل ایتھلیٹس بھی شامل ہیں۔

ایشیا کے واحد بین البراعظمی مقابلے کی حیثیت سے ایشین میراتھن چیمپیئن شپس اس سال ڈونگ گوان انٹرنیشنل میراتھن کے ساتھ ہوگی۔ مقابلہ 4 مواقع پر مشتمل ہے، جن کے نام فل میراتھن، ہاف میراتھن، منی میراتھن اور کارنیول فن رن ہیں، جو پروفیشنل سے لے کر نوآموز افراد تک کے لیے کھلے ہیں، اور خوشی اور جذبے کو پھیلا رہے ہیں۔ جبکہ شہر گزشتہ تین سالوں سے اپنی ملائم طاقت کو بہتر بنا رہا ہے، انتظامی کمیٹی نے ٹریکس کے ساتھ ساتھ بہتر ماحول کی بھی صورت گری کی ہے۔ یہ قدم ایک بین الاقوامی شہر کی حیثیت سے ڈونگ گوان کے سحر کو ظاہر کرنے کے لیے اٹھایا گیا ہے جو انٹیلی جنٹ ساخت گری اور ماحولیاتی توازن کے لیے شہرت رکھتا ہے۔ “ٹریکس انٹرنیشنل ایسوسی ایشن آف ایتھلیٹکس فیڈریشن اور ایشین ایتھلیٹکس ایسوسی ایشن کی جانب سے استعمال کے لیے باضابطہ طور پر منظور شدہ ہیں۔ یہ ڈونگ گوان کی ماحولیاتی ترقی و شہری انتظام کے حوالے سے آگے بڑھنے کی صلاحیتوں کو بھی ظاہر کرتا ہے۔” فو ویبو، ایتھلیٹکس ایڈمنسٹریٹو سینٹر، جنرل ایڈمنسٹریشن آف اسپورٹس آف چائنا میں ڈپٹی ڈائریکٹر آف کمپی ٹیشن نے کہا۔

ڈونگ گوان روایتی طور پر “کھیلوں کے شہر” کے طور پر جانا جاتا ہے، بالخصوص تیراکی، ویٹ لفٹنگ اور ڈریگن بوٹ کے مسکن کی حیثیت سے۔ اپنی انتہائی پیشہ ورانہ مضبوطی کے ساتھ شہر سالوں سے عوام کو ورززق کے لیے ماحول فراہم کرنے کو بھی مستحکم کرچکا ہے اور متعدد بین الاقوامی کھیلوں کے مواقع، بشمول فیبا باسکٹ بال ورلڈ کپ، ورلڈ کپ آف گالف اور بی ڈبلیو ایف سڈرمین کپ، دیکھ چکا ہے۔ اپنی معیشت کو تیز راستے پر ڈالتے ہوئے ڈونگ گوان کی توجہ ماحولیاتی تعمیرات اور ماحولیاتی تحفظ پر عرصے سے ہے، یانگ سیاؤتانگ، پبلسٹی چیف سی پی سی ڈونگ گوان میونسپل کمیٹی نے کہا۔ میراتھن چیمپیئن شپس اور دیگر بڑے پیمانے کے کھیلوں کے مواقع کا انعقاد اس کے کھیل سب کے لیے پروگرام کو اعلیٰ تر سطح پر لے جائے گا، انہوں نے مزید کہا۔ سونے پہ سہاگہ یہ کہ یہ شہریوں کو شہر کے قدرتی منظرنامے، ثقافتی ورثے اور ترقی میں کامیابیوں کو سراہنے میں مدد دے گا جب وہ سائنسی انداز سے کھیل میں شریک ہوں گے۔ یہ طریقہ ہے جس سے ڈونگ گوان باصلاحیت عالمی افراد کے لیے پرکشش حیثیت میں ابھرتا ہے۔

16 ویں ایشین میراتھن چیمپیئن شپس کی میزبانی کے ساتھ ڈونگ گوان اپنے کھیلوں اور ثقافتی پروگراموں کو زیادہ بااعتماد اور متحرک شہر کی حیثیت سے سہارا دے گا۔ یہ دوڑ میں شامل تمام برادریوں کی زیادہ توجہ بھی حاصل کرے گا اور ورزش اور صحت میں مزید دلچسپی پیدا کرے گا۔ یہ تو ظاہر ہے کہ دوڑتے ہوئے عوام شہر کو بااعتماد بناتے ہیں جبکہ صحت مندی اور قوت حیات کو فروغ دے رہے ہیں جس کا ڈونگ گوان نے ہمیشہ لطف اٹھایا ہے۔

ذریعہ: انتظامی کمیٹی برائے 16 ویں ایشین میراتھن چیمپیئن شپس

Related Post